آصف زرداری نے حکمت عملی تبدیل کی ہے اور اس میں کوئی شک نہیں کہ وہ جیل بھگت سکتے ہیں ………تجزیہ کارسلمان غنی

لاہور: تجزیہ کار سلمان غنی نے کہاہے کہ آصف زرداری نے حکمت عملی تبدیل کی ہے اور اس میں کوئی شک نہیں کہ وہ جیل بھگت سکتے ہیں ، وہ سمجھتے ہیں کہ شائدحکومت ناکامی کی طرف جارہی ہے اور قبل از وقت انتخابات کاماحول بن رہاہے ۔

دنیانیوز کے پروگرام ”تھنک ٹینک“ میں گفتگو کرتے ہوئے سلمان غنی نے کہا کہ پاکستان جس بنیادپر وجود میں آیا ، بھارت نے اس بنیاد کو کمزور کرنے کی کوشش کی ، اگر 1971میں وفاق کے تقاضے پورے کئے جاتے تو پاکستان نہ ٹوٹتا ۔انہوں نے کہا کہ سیاستدان کو جب دیوار کے ساتھ لگانے کی کوشش کی جاتی ہے تو خرابی پیدا ہوتی ہے ، آج بھی پاکستان کو مضبوط بنانے کیلئے آئین کی طرف لوٹنا چاہئے ، طاقت کے استعمال سے گڑ بڑ پیدا ہوتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ انڈیا سے ڈرنے کی ضرورت نہیں بلکہ خبر دار رہنے کی ضرورت ہے ، آئین کی طاقت ہونی چاہئے ، طاقت کا آئین نہیں چاہئے ، آرمی پبلک سکول کے واقعہ کے بعد ہم نے سبق سیکھا اور ایک ایکشن پلان مرتب کیا تھا ، حکومت اور فوج نے اس پر عمل بھی کیا ۔ انہوں نے کہا کہ ہم ایٹمی طاقت ضرور ہیں لیکن بنگلہ دیش جی ڈی پی میں ہم سے آگے چلا گیا اور اس کی اقتصادی ترقی ہم سے الگ ہوکر بڑھ گئی ۔

انہوں نے کہا ہمیں اپنے طرز عمل پر نظر ثانی کرکے ایک قوم بننا پڑےگا ، آصف زرداری نے حکمت عملی تبدیل کی ہے اور اس میں کوئی شک نہیں کہ وہ جیل بھگت سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے لوگوں کی بہتری کیلئے کچھ نہیں کیا ، اس لئے تاثر پیدا ہوا کہ حکومت ڈلیور نہیں کرسکتی ، آصف زرداری سمجھتے ہیں کہ شائدحکومت ناکامی کی طرف جارہی ہے اور قبل از وقت انتخابات کاماحول بن رہاہے ۔ان کا کہنا تھا کہ اسی حکومت کوڈلیور کرنا پڑے گا ، پاکستان نئے الیکشن کا متحمل نہیں ہوسکتا، آصف زرداری کا کیس کمزورہے کیونکہ تین ماہ پہلے وہ کہیں اور کھڑے تھے اور آج کہیں اورکھڑے ہیں،چیف جسٹس کو بھی ٹارگٹ کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں